اونچی ہیل سے خواتین کو پہنچنے والے جسمانی نقصانات

اونچی ہیلیں خواتین کیلئے فیشن کا روپ اختیار کرچکی ہیں لیکن اس کی قیمت جسم پر پڑنے والے مضر اثرات سے چکانی پڑتی ہے۔

1) کمر

اس کا پہلا نقصان جسم کو ملنے والا غیر متوازن سہارا ہوتا ہے۔ اس سے پاؤں پر جسمانی وزن غیر مساوی طور پر تقسیم ہوتا ہے جس سے غیر آرام دہ احساس، سوزش اور نچلی کمر کے حصوں میں درد محسوس ہوسکتا ہے۔
2) عضلات

دوسرا نقصان پنڈلیوں کے عضلات کو پہنچتا ہے۔ یہ ابھری ہوئی نصوں اور شدید درد کا باعث بھی بن سکتا ہے۔ دن کا اکثر حصہ اونچی ہیل پہنتے ہوئے گزاردینا پاؤں، انگوٹھوں ، تلوے اور ایڑھیوں میں درد کا باعث بن سکتا ہے۔

3) ٹخنے ٹوٹ بھی سکتے ہیں:

اکثر ایسا ہوتا ہے کہ چلتے ہوئے لوگوں کا پاؤں مُڑ جاتا ہے جس سے ٹخنوں میں درد کی شدید لہر پیدا ہوتی ہے جسے ankle sprains کہا جاتا ہے۔ تاہم ہیلز پہننے والی خواتین کا معاملہ مختلف ہوتا ہے۔ صرف درد ہی نہیں بلکہ چلتے چلتے پاؤں اگر اسی انداز سے مُڑ گیا تو ٹخنے کی ہڈی ٹوٹ بھی سکتی ہے۔

4) ریڑھ کی ہڈی میں معمول سے زیادہ خمیدہ (curve)

اونچی ہیل ریڑھ کی ہڈی میں معمول سے زیادہ پیچ و خم پیدا کرتی ہے۔ جتنی زیادہ اونچی ہیل ہوگی اتنا زیادہ کمر کی ہڈی میں خمیدہ ہوگا جو اوپری سطح اور نچلی سطح دونوں کیلئے نقصان دہ ہے۔

5) رگیں پھٹ بھی سکتی ہیں

اونچی ہیلز خون کی رگوں کو بھی دبادیتی ہے جس سے خون کے بہاؤ میں رکاوٹ آسکتی ہے۔ شدید حالتوں میں یہ رگیں پھٹ بھی سکتی ہیں۔ اونچی ہیل کا سب سے بدترین نقصان جو پہچتا ہے وہ ہے hammer toe. یہ اس حالت کو کہتے ہیں جب پاؤں کی اُنگلی بیچ میں سے مُڑ جاتی ہے جو کہ پنڈلی، خون کی رگوں اور پاؤں کی ہیئت کو خطرناک حد تک متاثر کرتی ہے۔

6) جوڑوں کا مرض

اونچی ہیل آپ کے جوڑوں میں موجود سخت لچکدار بافتوں (ligaments) کو بھی متاثر کرتی ہے۔ ہیل پہننے سے ران کی پوزیشن تبدیل ہوتی ہے جس سے گھٹنے کی ہڈیوں پر اثر پڑتا ہے۔ یہ حالت osteoarthritis (جوڑوں کا مرض) بھی پیدا کرسکتی ہے۔

کیٹاگری میں : صحت

اپنا تبصرہ بھیجیں